کون کہتا ہے کہ داڑھی میں انسان خوبصورت نہیں لگتا

کون کہتا ہے کہ داڑھی میں انسان خوبصورت نہیں لگتا

اور سفید کپڑے پہننے میں ثواب ذیادہ ہے کیونکہ سفید کپڑوں پر میل واضح دیکھائی دیتا ہے۔اسی طرح داڑھی رکھنا بھی بندے کو بہت سے گنا ہوں سے بچاتا ہے کیونکہ داڑھی والے بندے کی مثال اس سفید کپڑے کی ہوتی ہے جو ہر کسی کو دیکھائی دیتی ہے۔عام ادمی گنا کرتا ہے تو کوئی نہیں کہتا کہ اوھو فلا ادمی نے گنا کا کام کیا ہے لیکن جب داڑھی والا کوئی گناہ کا کام کرتا ہے تو سب لوگ منہ میں انگلی تھمائے ایک دوسرے سے کہتے ہیں کہ فلا ادمی نے اتنی لبمی داڑھی کے ہوتے ہوئے بھی گناہ کیا ہے اور اس طرح داڑھی والا کئی گناہوں سے آسانی سے بچ جاتا ہے۔ویسے داڑھی رکنھا تمام انبیا علیہ سلام کی سنت بھی ہے اور شعائیر اسلام ہے۔جو لوگ داڑھی کی تضحیک کرتے ہیں وہ گناہ کبیرہ کے مرتکب ہوتے ہیں۔جس طرح پھول پنکھڑیوں کے بغیر ادھورہ دیکھائی دیتا ہے بلکل ویسا ہی چہرہ بھی داڑھی کے بغیر خوبصورت دیکھائی نہیں دیتا۔اللہ تعالی ہم سب کو داڑھی رکھنے کی سعادت نصیب فرمائیں۔ ہمارے پیارے نبی حضرت محمد کی سنت بھی ہے۔